Wednesday, 18 May 2016

اخبار الكتب - المواهب اللطيفہ شرح مسند ابی حنیفہ۔عابد سندیؒ



اخبار الكتبالمواهب اللطيفہ شرح مسند ابی حنیفہعابد سندیؒ
--------------------
امام ابو حنیفہؒ کی مسانید بیسیوں ہیں ۔ اور ان پر ۔۔۔اور حدیثی کام اس کے علاوہ ہیں ۔
ان کی مسانید میں سب سے زیادہ مشہور ، مستند ۔۔۔امام حافظ عبد اللہ الحارثی البخاریؒ کی مسند امام اعظم ہے ۔
 اس پر بھی اگرچہ کئی طرح کام ہوا ہے ۔ لیکن اس کا ایک اختصار جو الحصکفیؒ نے کیا بہت مشہور ہے ۔

اگرچہ مسند الحصکفیؒ ۔۔۔مسند الحارثیؒ کا ہی اختصار ہے لیکن انہوں نے کچھ وہ روایات جو امام حماد بن ابی حنیفہؒ نے اپنے والد سے روایت کی ہیں ۔۔۔وہ بھی اس میں لی ہیں ۔۔۔
وہ انہوں نے یا تو مسند امام اعظمؒ ابن خسروؒ سے لی ہیں 
یا براہ راست مسند حماد بن ابی حنیفہؒ جو کہ دراصل کتاب الآثار کا ہی نسخہ ہے ۔۔۔سے لی ہیں۔
 مسند الحصکفیؒ کی دو شروح شائع ہو چکی ہیں ۔ 
ایک امام ملا علی قاریؒ کی ۔۔۔۔سند الانام 
دوسری مولانا محمد حسن سنبھلیؒ کی۔۔۔تنسیق النظام

ايك اور شرح جو عرصہ دراز سے مخطوط تھی اور ان دونوں شروح سے زیادہ بڑی تھی ۔۔۔اور کئی علما کے نزدیک بہت زیادہ اہمیت کی حامل تھی۔اب مولانا تقی الدین ندوی صاحب کی تحقیق سے دار النوادر سے ۷ جلدوں میں شائع ہو گئی۔
ؒالمواهب اللطيفة شرح مسند الإمام أبي حنيفة - شيخ محمد عابد السندي

مولانا عبد الرشید نعمانیؒ کے مطابق فتح الباری ابن حجرؒ کے بعد اس شان کی شرح نہیں لکھی گئی۔۔۔
 مسند الحصکفی میں غالباََ ساڑھے پانچسو تک احادیث ہوں گی ۔۔ اور اس کی اتنی ضخیم شرح ۔۔۔ 

متابعات و شواہد ، تخریج احادیث ، وصل منقطع ، نیز سند اور متن سے متعلق تمام چیزوں کا حل ۔۔۔

اور اس کے علاوہ متن کی جامع شرح ۔۔۔

پورا تعارف تو پڑھ کر ہی کروایا جا سکتا ہے ۔۔۔ 
ابھی تو مولانا تقی الدین ندوی صاحب حفظہ اللہ نے تحقیق تخریج و تعلیق مختصر کی ہے 
شاید اس لئے کہ حجم مزید نہ بڑھ جائے ورنہ شیخ سائد بکداش کی  تحریر پڑھ کر تو لگتا ہے کہ
اگر اس شرح کو مکمل تحقیق تخریج و تعلیق سے مزین کر کے شائع کیا جائے تو ۱۰ سے زیادہ جلدیں ہو جائیں



ایک بھائی ابو تراب علی رضا صاحب (اللہ ان کو جزائے خیر دے ) اس کے مثال کے طور پہ
كچھ صفحات اپلوڈ کئے ہیں جس میں محقق کا مقدمہ ۔ شیخ عابد کا ۲ صفحات کا مقدمہ  (اس میں واحد یہی تشنہ پہلو ہے کہ شیخ عابد سندیؒ نے اس کا مقدمہ نہیں لکھا ۔جیسے علامہ سنبھلیؒ نے لکھا یا جیسےحافظ ابن حجر ؒ کا مقدمہ) اور پہلی حدیث کی تھوڑی سی شرح شامل ہے ۔

2 comments:

  1. This comment has been removed by the author.

    ReplyDelete
    Replies
    1. معزرت خواہ ہوں بھائی یہ کتاب میرے پاس نہیں ہے ۔ میری تو خود تمنا ہے کوئی اپلوڈ کر دے۔
      مستقبل میں امید ہے عربی ویبسائٹ الوقفیۃ اس طرف توجہ کرے ۔
      والسلام

      Delete